جراحی

آج کا پاکستان: پاکستانی معاشرہ ایک بیمار معاشرہ بن چکا ہے۔ اس معاشرے کو اخلاقی بیماریوں نے لاغر اور قریب المرگ کر دیا ہے، اس معاشرے کی جراحی انتہائی ضروری ہو چکی ہے۔ اس بات میں کوئی شبہ نہیں رہا ہے کہ ایک بے رحم جراح اس انتہائی متعفن مریض کے لیے اشد ضروری ہو چکا ہے۔ ایک ایسا آپریشن درکار ہے جو اس جسم کے مردہ اور ناکارہ ہو جانے والے اعضاء کو بے دردی کے ساتھ جسم سے الگ کردے، جو اس جسم میں پرورش پانے والے خطرناک طفیلیوں کو اس جسم سے نکال باہر پھینکے، اس جسم کے ناسور بنے حصوں کو مریض کی مکمل بحالی کے لیے، اس مریض کی شفایابی کے لیے جسم سے الگ کر دے۔ اخلاقی انحطاط کی جس پستی میں ہم پہنچ چکے ہیں وہاں تک پہنچنا ہر کسی کے بس کی بات نہیں ہے۔ مجرم اور سزایافتہ ہمارے حکمران بنے بیٹھے ہیں، اور اپنے دوامِ اقتدار کے لیے کیا کیا تاویلیں اور دلیلیں گھڑ رہے ہیں جن کو سن کر ہنسی(یا شاید بے بسی کا رونا) روکے نہیں رکتی۔
ہمارے ملک کی سیاسی جماعتوں کا حال یہ ہے کی تمام جماعتیں جمہوریت کی چیمپیئن کہلاتی ہیں مگر کوئی جماعت اپنے عہدے داروں کے لیے جماعت کے اندر انتخابات نہیں کرا تی۔ جماعتیں گدیاں اور وراثتیں بن گئیں ہیں۔ بھٹو کی پارٹی کا صدر تا حیات بھٹو ہی ہو گا(یا شاید بھٹو کے نقاب میں زرداری ہو گا)۔ شریف خاندان ہی ایک پارٹی کا تا حیات مالک ہو گا۔ ولی خان کی اولاد ہی ان کی جماعت کی وارث ہو گی۔ دکھاوے کے پارٹی الیکشن اور پھر وہی خاندانی وارث۔
کچھ عرصہ پیشتر ایک پارٹی ایک آمر کو باوردی صدر منتخب کرنے پر مُصر تھی، آج وہی پارٹی جمہوریت کا نعرہ سب سے پہلے لگاتی ہے۔ ایک پارٹی ہر حکومت میں شامل ہے اور دھونس اور دھمکیوں سے اپنی شرائط ہر صورت منواتی رہتی ہے۔ ایک تیسری پارٹی مذہب کا نام لے کر ہر حکومت کو بصورت بیساکھی اپنا سہارا دینے کا فن یوں خوبی سے نبھاتی ہے کہ اس کی سیاست پر عوام و خواص عش عش کر اُٹھتے ہیں۔
وقت اس جراحی کا متقاضی ہے۔ یہ مریض مزید کسی سستی کا متحمل نہیں ہو سکتا۔ عوام کو بھی ہوش کے ناخن لینے ہونگے۔ بظاہر عوام ہی ان کو منتخب کر کے اقتدار کے ایوانوں تک پہنچاتے ہیں۔ آج کے مسائل کا فقط ایک ہی حل ہے کہ ایک بے رحم احتساب جو جنگی بنیاد پر ہر مجرم کو قرار واقعی سزا دےکر اپنے منطقی انجام تک پہنچائے۔ اس ملک کے مخلص دردمند شہری میری طرح صرف کڑھ ہی پاتے ہیں، کوئی مسیحا اور نجات دہندہ نظر نہیں آتا۔ اے خدا اس ملک کی حفاظت فرما اور اسے مخلص عوام اور بے غرض حکمران عطا فرما۔ آمین

Advertisements

Tagged: , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , ,

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: